کراچی چڑیا گھر کی ممتاز بیگم انٹرنیشنل میڈیا کی توجہ کا مرکز


0
1 share

شہر کراچی کے چڑیا گھر میں ایک ایسی مخلوق موجود ہے جس سے ملتی جلتی مخلوق دنیا میں کہیں اور نہیں پائی جاتی ،جس کا نام ہے “ممتاز بیگم”جو کسی بھی تعارف کی محتاج نہیں۔ کئی عرصے سے اپنے مخصوص انداز میں بستر پر براجمان ممتاز بیگم اپنے کردار، لطیفوں اور حاضر دماغی سے لوگوں کے چہروں پر مسکراہٹیں بکھیرتی آرہی ہیں۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر ایٹالس اوبسکارا نامی انٹرنیشنل ٹریول کی جو کہ دنیا بھر سے انوکھی اور منفرد چیزوں کو منظر عام پر لیتی ہے، کی ایک ٹوئٹ بہت وائرل ہو رہی ہے جس میں وہ ممتاز بیگم کا ذکر کرتے ہوئے ان کے بارے میں بتا رہے ہیں اور ہزاروں کی تعداد میں لوگ ممتاز بیگم کی تعریفیں کر رہے ہیں۔

برطانوی خبررساں ادارے کی اس رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ آدھی لومڑی اور آدھی عورت کا یہ افسانوی کردار کئی نسلوں سے کراچی کے چڑیا گھر کی سب سے زیادہ پرکشش تفریح ہے۔ اس اخبار کے نمائندے سے گفتگو کرتے ہوئے ممتاز بیگم کا کہنا تھا کہ انہیں دیکھ کر اور ان سے باتیں کر کے لوگ خوش ہوتے ہیں اور یہی چیز ان کے لیے خوشی کا باعث ہے۔

برطانوی اخبار کے اس رپورٹر کا ممتاز بیگم کے بارے میں کہنا ہے کہ لوگ چڑیا گھر جانور تو دیکھنے جاتے ہی ہیں مگر ممتاز بیگم سے ملنے کو سب سے زیادہ ترجیح دیتے ہیں کیونکہ یہ ہنس کھیل کر لوگوں کو مزے مزے کے لطیفے سناتی اور قسمت کا حال بھی بتاتی ہیں۔

Image Source: Youtube

ممتاز محل کی ممتاز بیگم کون ہیں؟

چڑیا گھر کے “ممتاز محل”میں موجود ممتاز بیگم جس کا سر انسانی اور دھڑ لومڑی کا ہے ،آدھی عورت اور آدھی لومڑی جیسی مخلوق پر دنگ رہ جاتے ہیں اور ایک نظر میں یہ جاننا مشکل ہو جاتا ہے کہ اصل میں اللہ کی قدرت ہے یا صرف یہ ایک بہروپ ہے۔ ممتاز بیگم کوئی انوکھی مخلوق نہیں بلکہ اس عورت کے پیچھے ایک مرد ہے جس نے لومڑی کی کھال میں ایک خاص قسم کا روپ دھار رکھا ہے ، اپنے منفرد افسانوی کردار کی وجہ سے ممتاز بیگم نہ صرف بچوں بلکہ بڑوں میں بھی مقبول ہے آپ کو یہ جان کر حیرت ہوگی کہ ممتاز بیگم کوئی خاتون نہیں بلکہ ایک مرد ہیں جن کا اصل نام مراد علی ہے۔ مراد علی میک اپ کے ذریعے عورت جیسا چہرہ بنا لیتے ہیں اور دھڑ لومڑی جیسا ہے کیونکہ وہ نیچے سے لومڑی جیسی کھال پہنے ہوئے ہوتے ہیں۔

Image Source: Youtube

وہ تقریباً چالیس سال سے بارہ گھنٹے سے زائد وقت ممتاز بیگم کا کردار نبھاکر چڑیا گھر میں آنے والوں کو محظوظ کررہے ہیں۔ جب کہ انہیں اپنے گاﺅں جانے کیلئے اُنہیں ایک ماہ کی چھٹی ملتی ہے اور اس دوران ممتاز محل بند رہتا ہے۔مراد علی سے قبل ان کے والد”ممتاز بیگم” کا کردار ادا کرتے تھے لیکن ان کے انتقال کے بعد ان کے بیٹے مراد علی نے یہ کردار سنبھالیا۔

دنیا کی تاریخ بتاتی ہے کہ انسان ہمیشہ سے عجیب و غریب قسم کی مخلوقات کو دیکھنا پسند کرتا اور اس میں دلچسپی رکھتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ چالیس سالوں میں کئی ملکی و غیرملکی لوگوں کی ایک بڑی تعداد ممتاز بیگم سے ملاقات کرچکی ہے۔


Like it? Share with your friends!

0
1 share

What's Your Reaction?

hate hate
0
hate
confused confused
0
confused
fail fail
0
fail
fun fun
1
fun
geeky geeky
0
geeky
love love
0
love
lol lol
1
lol
omg omg
0
omg
win win
0
win

0 Comments

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Choose A Format
Personality quiz
Series of questions that intends to reveal something about the personality
Trivia quiz
Series of questions with right and wrong answers that intends to check knowledge
Poll
Voting to make decisions or determine opinions
Story
Formatted Text with Embeds and Visuals
List
The Classic Internet Listicles
Countdown
The Classic Internet Countdowns
Open List
Submit your own item and vote up for the best submission
Ranked List
Upvote or downvote to decide the best list item
Meme
Upload your own images to make custom memes
Video
Youtube, Vimeo or Vine Embeds
Audio
Soundcloud or Mixcloud Embeds
Image
Photo or GIF
Gif
GIF format