بدین میں 8 سالہ قوت گویائی اور ہاتھوں سے محروم زیادتی کا نشانہ بن گئی


0

کسی نے کیا خوب کہا ہے کہ قیامت ایک روز خود بتائی گئی کہ قیامت آخر کیوں ضروری تھی۔ ملک میں حوا کی بیٹی کے ساتھ ظلم و بربریت کا ایک اور اندوہناک واقعہ پیش آیا، جہاں 8 سالہ معذور اور قوت گویائی سے محروم معصوم کو جنسی درندے نے اپنی حوس کا نشانہ بنا ڈالا۔

تفصیلات کے مطابق صوبہ سندھ کے ضلع بدین کے کھور واہ شہر کے نواحی گاؤں عمر پسرور میں جنسی زیادتی کا ہولناک واقعہ پیش آیا، جہاں ایک 8 سالہ کمسن بچی جوکہ ناصرف قوت گویائی بلکہ دونوں ہاتھوں کی نعمت سے محروم ہے، اسے بے ضمیر اور درندہ صفت مجرم کی جانب سے زیادتی کا نشانہ بنایا گیا۔ بعدازاں مجرم موقع سے فرار ہوگیا۔

rape
Image Source: Youtube

بچی کے کئی دیر تک لاپتہ رہنے کے بعد گھر والوں نے جب متاثرہ بچی کی تلاش شروع کی، متاثرہ بچی بے ہوشی کی حالت میں گھر کے قریب واٹر کورس کے پاس سے ملی۔ جس پر اہلخانہ بچی کو اسپتال منتقل کرتے ہوئے فوری طور پر پولیس کو واقعہ کی اطلاع فراہم کی۔

پولیس نے موقع پر پہنچ کر متاثرہ لڑکی کا فوری میڈیکل کرایا، جہاں ابتدائی میڈیکل رپورٹ میں بچی کو زیادتی کا نشانہ بنانے کی تصدیق ہوئی، جبکہ تحقیقات کے لئے بچی کے مزید نمونے بھی حاصل کرکئے گئے۔

Image Source: Twitter

اس موقع پر پولیس کا کہنا ہے متاثرہ بچی قوت گویائی سے محروم اور دونوں ہاتھوں سے بھی معذور بھی ہے۔ پولیس کی جانب سے واقعے تحقیقات شروع کردی۔ اگرچے ابھی تک ملزم کی شناخت نہیں ہوسکی ہے لیکن پولیس کی جانب سے امید ظاہری کی جا رہی ہے کہ واقعے کی مکمل میڈیکل رپورٹ آنے کے بعد ملزم کی نشاندہی اور تحقیقات میں بڑی پیش رفت ممکن ہوسکے گی۔

افسوس کے ساتھ ہمارے ملک میں پچھلے کچھ عرصے میں خواتین اور کمسن بچے اور بچیوں کے ساتھ زیادتیوں کے واقعات میں اضافہ دیکھا گیا ہے۔ جس بحیثیت قوم ہم سب کے لئے ناصرف یہ پریشان کن بات ہے بلکہ اس ملک کی بدنامی بھی ہورہی ہے۔ ، موٹر وے عصمت دری کا معاملہ، ھر گھوٹکی میں 4 سالہ بچی سے زیادتی کا واقعہ پھر اب یہ اور ایسے کئی اور عصمت دری کے واقعات کا مسئلہ ملک میں حکومت اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے لئے ایک نئے چیلنج کے طور پر سامنے آ رہیں ہے۔

یاد رہے کچھ عرصہ قبل لاہور کے علاقے شاہدرہ میں اجتماعی زیادتی کا ایک دل دہلا دینے والا واقعہ پیش آیا تھا، جس میں ایک 13 سالہ گداگر لڑکی کو رکشہ ڈرائیور نے اپنے دو ساتھیوں کی ساتھ مل کر مبینہ طور پر اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا تھا۔ بعدازاں پولیس نے ابتدائی کارروائی میں ایک ملزم کو فوری طور پر گرفتار کرلیا گیا تھا۔


Like it? Share with your friends!

0

What's Your Reaction?

hate hate
0
hate
confused confused
0
confused
fail fail
0
fail
fun fun
0
fun
geeky geeky
0
geeky
love love
0
love
lol lol
0
lol
omg omg
0
omg
win win
0
win

0 Comments

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Choose A Format
Personality quiz
Series of questions that intends to reveal something about the personality
Trivia quiz
Series of questions with right and wrong answers that intends to check knowledge
Poll
Voting to make decisions or determine opinions
Story
Formatted Text with Embeds and Visuals
List
The Classic Internet Listicles
Countdown
The Classic Internet Countdowns
Open List
Submit your own item and vote up for the best submission
Ranked List
Upvote or downvote to decide the best list item
Meme
Upload your own images to make custom memes
Video
Youtube, Vimeo or Vine Embeds
Audio
Soundcloud or Mixcloud Embeds
Image
Photo or GIF
Gif
GIF format