ورلڈ یوتھ اسکریبل میں پاکستانی سید عماد علی نے تاریخ رقم کردی


0

پاکستان کے سید عماد علی نے کراچی میں منعقد ہونے والے ورلڈ انگلش اسکریبل پلیئرز ایسوسی ایشن (ویسپا) کے یوتھ کپ کا فائنل جیت لیا جبکہ وہ دو مرتبہ ورلڈ یوتھ اسکریبل ٹائٹل جیتنے والے دنیا کے پہلے کھلاڑی بن گئے ہیں۔

کورونا وائرس کی وجہ سے یوتھ کپ، جسے پہلے عالمی یوتھ اسکریبل چیمپئن شپ کہا جاتا تھا، کے مقابلے آن لائن منعقد ہوئے اور پاکستان نے مسلسل دوسری مرتبہ ورچوئل چیمپئن شپ کی میزبانی کی۔ دو روزہ فائنل میں ٹاپ 10 کھلاڑیوں نے 13 گیمز کھیلے جن میں 15 سالہ سید عماد علی نے 9 گیمز جیتے اور 329 کے اسپریڈ اسکور کے ساتھ ٹائٹل اپنے نام کیا۔ بھارت کے مادھو گوپال نے بھی 9 گیمز جیتے لیکن وہ دوسرے نمبر پر رہے، تھائی لینڈ کے نپت نے تیسری پوزیشن حاصل کی۔ساتھ ہی فائنلز میں پہنچنے والے پاکستان کے دوسرے کھلاڑی حشام ہادی خان نے 7 گیمز میں کامیابی حاصل کی اور چوتھے نمبر پر رہے۔

Image Source: Twitter

خیال رہے کہ سید عماد علی نے 2018 میں متحدہ عرب امارات میں ہونے والا ویسپا یوتھ اسکریبل کپ بھی جیت چکے ہیں، وہ 2 مرتبہ ویسپا یوتھ کپ جیتنے والے دنیا کے پہلے کھلاڑی بھی بن گئے ہیں۔

مجموعی طور پر جونئیر لیول پر سید عماد علی پاکستان کے لیے تین عالمی اعزازات جیت چکے ہیں جن میں 2 ویسپا ورلڈ یوتھ کپ اور 2019 کی ورلڈ جونئیر اسکریبل چیمپیئن شپ شامل ہیں۔

سید عماد علی کا کہنا تھا کہ دوسری مرتبہ ورلڈ یوتھ ٹائٹل جیتنے پرخوشی ہے، میں نے محنت کی جس کا صلہ ملا۔

انہوں نے کہا کہ فائنلز میں تمام حریف ہی مشکل تھے لیکن بھارت اور تھائی لینڈ کے کھلاڑیوں نے ٹف ٹائم دیا۔ سید عمد علی نے کہا کہ اب ورلڈ اسکریبل چیمپیئن شپ میں عمدہ کارکردگی دکھانے کی کوشش کروں گا۔

مزید پڑھیں: ننھے طالب علم نے بین الاقوامی انگریزی زبان کا مقابلہ جیت لیا

فائنلز کے اختتام پر بھارت کو اسپرٹ آف اسکریبل کا ایوارڈ دیا گیا جبکہ ٹورنامنٹ کی بہترین خاتون کھلاڑی کا ایوارڈ سری لنکا کی سندلی ویتھا ناگے کے نام رہا اور ملائیشیا کے ڈریسڈن لم کم عمر ترین کھلاڑی قرار پائے۔ایونٹ میں 14 ممالک کے 72 کھلاڑیوں نے حصہ لیا تھا اور بھارت سمیت تمام ممالک کے کھلاڑیوں نے ایونٹ کے شاندار انتظامات کو سراہا۔

Image Source: Twitter

پاکستان اسکریبل ایسوسی ایشن کے صدر اور پی ایس ایل کی فرنچائز کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے مالک ندیم عمر اختتامی تقریب کے مہمان خصوصی تھے۔ ندیم عمر کا کہنا تھا کہ اسکریبل کا کھیل دنیا بھر کے کھلاڑیوں کو قریب لاتا ہے، بھارت  اور پاکستان کے حالات جتنے بھی کشیدہ ہوں لیکن بھارتی کھلاڑیوں نے کھیل کی اسپرٹ سے سب کے دل جیت لئے، کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کرکٹ کے ساتھ ساتھ دیگر کھیلوں کو بھی سپورٹ کرتی رہے گی۔

مزید پڑھیں: پاکستانی سائنس دان آصفہ اختر نے جرمنی کا مشہور لبنز ایوارڈ اپنے نام کرلیا

ندیم عمر نے ورلڈ یوتھ چیمپیئن سید عماد علی کے لئے ایک لاکھ جبکہ پاکستان ٹیم کے لئے بھی نقد انعام کا اعلان کیا، تقریب کے اختتام پر ندیم عمر اور اسپانسرز کے نمائندوں نے انعامات تقسیم کئے، اختتامی تقریب کے دوران ایونٹ میں حصہ لینے والے کھلاڑی اور ویسپا کے عہدیداران آن لائن موجود تھے۔


Like it? Share with your friends!

0

What's Your Reaction?

hate hate
0
hate
confused confused
0
confused
fail fail
0
fail
fun fun
0
fun
geeky geeky
0
geeky
love love
0
love
lol lol
0
lol
omg omg
1
omg
win win
0
win

0 Comments

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Choose A Format
Personality quiz
Series of questions that intends to reveal something about the personality
Trivia quiz
Series of questions with right and wrong answers that intends to check knowledge
Poll
Voting to make decisions or determine opinions
Story
Formatted Text with Embeds and Visuals
List
The Classic Internet Listicles
Countdown
The Classic Internet Countdowns
Open List
Submit your own item and vote up for the best submission
Ranked List
Upvote or downvote to decide the best list item
Meme
Upload your own images to make custom memes
Video
Youtube, Vimeo or Vine Embeds
Audio
Soundcloud or Mixcloud Embeds
Image
Photo or GIF
Gif
GIF format