لیجنڈری فنکار معین اختر کا یوم پیدائش آج منایا جارہا ہے


0

لوگوں کے چہروں پر قہقہے بکھیرنے والے ہر دلعزیز فنکار معین اختر کا 72واں یوم پیدائش آج منایا جارہا ہے۔ ان کی سالگرہ کے موقع پر گوگل نے بھی اپنے ڈوڈل سے انہیں شاندار انداز میں خراج تحسین پیش کرتے ہوئے اپنے ویب سائٹ ڈوڈل پر ان کی تصاویر سجائیں ہیں جن میں لیجنڈ اداکار کے مختلف کردار کی تصویریں شامل ہیں۔

واضح رہے کہ ان کی سالگرہ کے دن ایک خط بھی سامنے آیا جس میں انہوں نے 44 برس قبل اپنے قریبی دوست اقبال وحید کو لکھا اور اس میں انہوں نے اپنی موت کا ذکر بھی کیا۔

Image Source: Express Tribune

اٹھارہ اگست 1977 کو لکھے گئے اس خط میں معین اختر نے اپنے دوست کو خط کے ساتھ بھیجی گئی تصویر بھی سنبھال کر رکھنے کا کہا اور لکھا: اپنے عزیز دوست اقبال وحید کے لیے، موت کا وقت؟ شاید کسی کو نہیں معلوم کہ سب کو ایک نہ ایک دن جانا ہوگا، شاید پہل ہم ہی کر بیٹھیں، اس صورت میں اس تحریر اور اس تصویر دونوں کی حفاظت کرنا جو تمہیں ہمیشہ اس مخلص کی یاد دلاتی رہے گی۔

معین اختر کا خط, فوٹو: سوشل میڈیا
Image Source: Geo Tv

فن کی دنیا میں معین اختر وہ نام ہے جس کے بغیر پاکستان ٹیلی ویژن اور اردو مزاح کی تاریخ نامکمل ہے۔لاجواب ڈائیلاگ ڈلیوری اور ہر کردار میں حقیقت کا رنگ بھر دینے کا فن رکھنے والے معین اختر کو اگر پاکستانی تاریخ کا سب سے ورسٹائل فنکار کہا جائے تو شاید غلط نہ ہوگا۔ انہوں نے زندگی کی پہلی پرفارمنس شیکسپیئر کے ناول سے ماخوذ اسٹیج ڈرامے ’دی مرچنٹ آف وینس‘ میں محض 13 برس کی عمر میں دی جب کہ فنی کیرئیر کی باقاعدہ شروعات پاکستان کے پہلے یوم دفاع پر 1966 میں کی۔

معین اختر نے اپنی لازوال اداکاری سے ان مٹ نقوش چھوڑے ہیں ، ڈرامہ سیریل ‘روزی’، میں وہ اپنے فن کی بلندیوں پر نظر آئے جبکہ ‘آنگن ٹیڑھا، انتظار فرمائیے، بندر روڈ سے کیماڑی ،ہاف پلیٹ اور عید ٹرین’ جیسے بے مثال ڈرامے آج بھی ان کے مداحوں کے ذہنوں میں تازہ ہیں۔

Image Source: File

اسٹیج شوز کی بات کریں تو معین اختر کی شہرت کے چرچے نا صرف پاکستان بلکہ بھارت سمیت دنیا کے دیگر ممالک میں بھی ہوئے، ‘بڈھا گھر پر ہے، یس سر عید نو سر عید ، بے بیا معین اختر ، بکرا قسطوں پر’ معین اختر کے یادگار اسٹیج شوز ہیں۔

مزید پڑھیں: ریٹنگ نے میڈیا کی آزادی کی بربادی کردی ہے، انور مقصود

معین اختر نے 44 سال تک کامیڈی، اداکاری، گلوکاری اور پروڈکشن سمیت شوبز کے تقریباً تمام شعبوں میں ہی کام کیا معین اختر  کی خدمات کے اعتراف میں ان کو  صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی سے بھی نوازا گیا۔ یہ عظیم فنکار 22 اپریل 2011ء کو اپنے کروڑوں مداحوں کو سوگوار چھوڑ کر جہان فانی سے کوچ کر گیا مگر پھر بھی اپنے مداحوں کے دلوں میں زندہ ہے۔


Like it? Share with your friends!

0

What's Your Reaction?

hate hate
0
hate
confused confused
0
confused
fail fail
0
fail
fun fun
0
fun
geeky geeky
0
geeky
love love
0
love
lol lol
0
lol
omg omg
0
omg
win win
0
win

0 Comments

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Choose A Format
Personality quiz
Series of questions that intends to reveal something about the personality
Trivia quiz
Series of questions with right and wrong answers that intends to check knowledge
Poll
Voting to make decisions or determine opinions
Story
Formatted Text with Embeds and Visuals
List
The Classic Internet Listicles
Countdown
The Classic Internet Countdowns
Open List
Submit your own item and vote up for the best submission
Ranked List
Upvote or downvote to decide the best list item
Meme
Upload your own images to make custom memes
Video
Youtube, Vimeo or Vine Embeds
Audio
Soundcloud or Mixcloud Embeds
Image
Photo or GIF
Gif
GIF format