بوائے فرینڈ کو بھیس بدل کر گرل فرینڈ کے پیپرز دینا مہنگا پڑگیا


0

محبت وجنگ میں ہر چیز جائز ہے، یہ مشہور کہاوت ہم برسوں سے سنتے آ رہے ہیں، اگرچے حقیقت میں اس کی مثالیں کم ہی دیکھنے میں کو ملتی ہیں، لیکن جب مثالیں نظر آتی ہیں، تو پھر دیکھنے اور سننے والے سب ہی حیران رہے جاتے ہیں، ایسا ہی ایک مثال حال ہی میں افریقی ملک سینیگال میں دیکھی گئی، جہاں بھیس بدل کر گرل فرینڈ کا امتحان دینے والے نوجوان کو پولیس نے گرفتار کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق یہ حیرت انگیز واقعہ سینیگال کے شہر دیوربیل میں پیش آیا، جہاں خادم امبوپ نامی 22 سالہ نوجوان اپنی 19 سالہ گرل فرینڈ کانگوئے دیوم کا روپ دھار کر اس کا گریجویشن کا امتحان دینے گیا تھا، لیکن انتظامیہ کی جانب سے پکڑلیا گیا۔ ملزم خود بھی گستون ہرجردے سینٹ لوئی یونیورسٹی کا طالب علم ہے۔

Image Source: Facebook

اس واقعے کے حوالے سے بتایا جا رہا ہے کہ نوجوان خادم امبوپ کی جانب سے لمبے بالوں والی وِگ لگانے کے علاوہ، لڑکیوں کا لباس بھی پہن رکھا تھا، جبکہ بالوں اور میک اپ کے ساتھ ساتھ اس نے روایتی اسکارف بھی پہن ہوا تھا تاکہ کسی کو بھی اس پر شک نہ ہوسکے۔

لہذا ابتداء میں نوجوان خادم امبوپ کو اس جعلسازی پر کامیابی ملی اور اس نے باآسانی دو پیپرز دیئے، اس دوران اسے نہ تو امتحانی مرکز پر موجود عملہ پہچان سکا اور نہ ہی کلاس میں موجود انویجیلیٹر پہچان سکے۔ لیکن کہتے ہیں سچ ایک دن کھل کر سامنے آہی جاتا ہے، اور ایسا کچھ اس نوجوان کے ساتھ ہوا، جہان تیسرے پرچے میں وہاں کے سپروائزر کو اس ’’لڑکی‘‘ پر شک ہوگیا۔ چنانچہ تلاشی لینے پر ذرا سی دیر میں انتظامیہ پر انکشاف ہوا کہ کلاس میں موجود وہ مشتبہ لڑکی نہیں بلکہ ایک لڑکا ہے، جو لڑکی کا بھیس کرکے امتحان دینے آیا ہے۔

اس انکشاف کے ساتھ ہی امتحانی مرکز کی انتظامیہ نے فوری طور پر پولیس کو بلوا لیا۔ جہاں ملزم امبوپ نے پولیس کے روبرو تمام حقیقت سے پردہ اٹھایا اور بتایا کہ وہ اپنی گرل فرینڈ کانگوئے دیوم کی جگہ امتحان دے رہا تھا جو قریبی ریسٹورینٹ میں اس کا انتظار کر رہی ہے۔ جس پر پولیس نے فوراً کاروائی کی اور لڑکی کو بھی گرفتار کرلیا۔ پولیس کی جانب سے دونوں پر امتحان میں جعلسازی کا مقدمہ بھی درج کرلیا گیا ہے۔

دوران تفتیش خادم امبوپ نے پولیس حکام کو بیان ریکارڈ کراتے ہوئے بتایا کہ اس نے کوئی جرم نہیں کیا بلکہ وہ اپنی گرل فرینڈ کی مدد کر رہا تھا کیونکہ وہ انگریزی کمزور ہونے کی وجہ سے گریجویشن کے امتحان میں شدید مشکلات کا شکار تھی۔

مزید پڑھیں: پاکستانی نوجوان نے محبت کی مثال قائم کر دی، بیوی کیلئے چاند پر پلاٹ

اس جوڑے کے خلاف عدالت میں مقدمہ جاری ہے، جس میں خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ ممکنہ طور پر اس جوڑے کو سینیگال میں قومی سطح کے کسی بھی سرکاری امتحان کے لیے 5 سال تک نااہل قرار دیا جاسکتا ہے، جبکہ بھاری جرمانہ بھی متوقع ہے۔ ساتھ ہی دنوں کو قید کی سزا سنائے جانے کے امکانات کو رد نہیں کیا جاسکتا ہے۔

واضح رہے اس ہی طرز کا ایک معاملا کچھ عرصہ قبل پشاور سے بھی سامنے آیا تھا جس میں دیکھا گیا تھا کہ ایک نوجوان برقع پہننے کہیں جا رہا تھا کہ لوگوں کو شک ہوا اور انہوں نے پولیس کو اطلاع فراہم کی، جس پر اس بات کی تصدیق ہوئی کہ برقعہ میں موجود خاتون نہیں بلکہ مرد ہے۔ جس کا نام آصف ہے۔ دوران تفتیش جرم نے انکشاف کیا کہ وہ اپنی محبوبہ سے ملنے جا رہا تھا، پکڑے جانے کے ڈر سے عبایا پہنا تھا۔


Like it? Share with your friends!

0

What's Your Reaction?

hate hate
0
hate
confused confused
0
confused
fail fail
0
fail
fun fun
0
fun
geeky geeky
0
geeky
love love
0
love
lol lol
0
lol
omg omg
1
omg
win win
0
win

0 Comments

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Choose A Format
Personality quiz
Series of questions that intends to reveal something about the personality
Trivia quiz
Series of questions with right and wrong answers that intends to check knowledge
Poll
Voting to make decisions or determine opinions
Story
Formatted Text with Embeds and Visuals
List
The Classic Internet Listicles
Countdown
The Classic Internet Countdowns
Open List
Submit your own item and vote up for the best submission
Ranked List
Upvote or downvote to decide the best list item
Meme
Upload your own images to make custom memes
Video
Youtube, Vimeo or Vine Embeds
Audio
Soundcloud or Mixcloud Embeds
Image
Photo or GIF
Gif
GIF format