افطاری میں کولڈ ڈرنک کا استعمال انتہائی مضر


0

ماہ مقدس میں گرمی کی شدت کے باعث سحر وافطار میں ٹھنڈے ٹھنڈے مشروبات پینے کا دل چاہتا ہے اس لئے اکثر گھروں میں افطاری میں سافٹ ڈرنکس کا استعمال کیا جاتا ہے جو کہ صحت کے لئے انتہائی مضر ہے کیونکہ روزے کی حالت میں سارا دن بھوکا رہنے کے بعد سافٹ ڈرنک کا ایک گلاس بھی ہمارے جسم کے لیے بے حد نقصان دہ ثابت ہوتا ہے بلکہ یہ جسم کے ہر اعضاء کو نقصان پہنچانے کا سبب بنتا ہے ۔

یہ مشروبات جسمانی صحت کے لئے بالکل بھی موزوں نہیں کیونکہ ان کے فوائد تو کچھ نہیں لیکن نقصانات بے حساب ہیں آئیے جانتے ہیں؛

Image Source: parenting.firstcry.com

سحر وافطار کے دوران کولڈ ڈرنک کے بارے میں یہ خیال غلط ہے کہ یہ جسم میں پانی کی کمی کو پورا کرتا ہے ، پانی کا کوئی نعم البدل نہیں اس لئے سحری اور افطار کے دوران سافٹ ڈرنک کے بجائے پانی اور جوسز کا استعمال زیادہ کرنا چاہیئے تاکہ روزے کے دوران جسم میں پانی کی مطلوبہ مقدار برقرار رہے۔

جو لوگ سحر کے وقت کولڈ ڈرنکس پیتے ہیں ان کےجسم میں مٹھاس کی طلب ان مشروبات کو نہ پینے والوں کے مقابلے کئی گنا بڑھ جاتی ہے چنانچہ ایسے لوگوں میں میٹھے کی طلب میں اضافہ ہوتا ہے اور وہ افطاری میں بھی ان مشروبات سے لطف اندوز ہوتے ہیں جو کہ درست نہیں ۔

سحر وافطار میں سافٹ ڈرنکس روزے دار کے گردوں اور جگر کی صحت کے لئے تباہ کن ہے کیونکہ اس کے استعمال سے گردے وجگر کے امراض کا خطرہ کئی گنا بڑھ سکتا ہے۔

ان مشروبات میں شامل کاربونیٹ ایسڈ یا عام الفاظ میں گیس معدے میں جاکر ہوا بھر جانے کا باعث بنتا ہے جس سے روزے کی حالت میں پیٹ درد کی شکایت پیدا ہوجاتی ہے۔

Image Source: Dawn.com

سحر وافطار میں بہت زیادہ مقدار میں سوڈا مشروبات کا استعمال ہڈیوں کی مضبوطی پر بھی اثر انداز ہوتا ہے ، ان کے استعمال سے ہڈیوں سے کیلشیئم کا اخراج ہوتا ہے جو ان کے ٹوٹنے کا خطرہ بڑھا دیتا ہے۔

لہٰذا ، اچھی صحت کے لئے سوڈا ملے ان میٹھے مشروبات سے گریز کرنا چاہیئے ۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ رمضان میں تو خاص طور پر ان مشروبات کو اپنی غذا سے دور رکھنا چاہیئے اور اس کی جگہ پانی، تازہ پھلوں کا جوس اور شیکس استعمال کرنے چاہئیں کیونکہ ان مشروبات کے دیرپہ نقصانات کئی زیادہ ہیں جب کہ ان سے پیدا ہونے والی بیماریوں کی فہرست بھی کافی طویل ہے جس میں موٹاپا ، ذیابطیس ، ہڈیوں اور دانتوں کو نقصان، جلدی امراض، امراض قلب، ڈپریشن، مرگی، متلی، دست، نظر کی کمزوری شامل ہیں۔ تاہم ان خطرناک ڈرنکس کا ایک اور نقصان یہ بھی ہے کہ یہ کینسر کا سبب بھی بن سکتی ہیں۔


Like it? Share with your friends!

0

What's Your Reaction?

hate hate
0
hate
confused confused
0
confused
fail fail
0
fail
fun fun
0
fun
geeky geeky
0
geeky
love love
0
love
lol lol
0
lol
omg omg
0
omg
win win
0
win

0 Comments

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Choose A Format
Personality quiz
Series of questions that intends to reveal something about the personality
Trivia quiz
Series of questions with right and wrong answers that intends to check knowledge
Poll
Voting to make decisions or determine opinions
Story
Formatted Text with Embeds and Visuals
List
The Classic Internet Listicles
Countdown
The Classic Internet Countdowns
Open List
Submit your own item and vote up for the best submission
Ranked List
Upvote or downvote to decide the best list item
Meme
Upload your own images to make custom memes
Video
Youtube, Vimeo or Vine Embeds
Audio
Soundcloud or Mixcloud Embeds
Image
Photo or GIF
Gif
GIF format